لکھاری کاپی رائیٹ پالیسی لکھاری ڈاٹ کام

لکھاری ویب سائیٹ کی پالیسی
بسم اللہ الرحمن الرحیم

لکھاری ویب سائیٹ کی  کاپی رائیٹ پالیسی کو مدنظر رکھتے ہوئے کوئی بھی تحریر  یا خبر  بلاگ  کالم اور کسی بھی قسم کی فائل اگر آپ اپنے بلاگ. فورم. کسی بھی قسم کی ویب سائیٹ یا پرنٹ کر کے شائع کرنا چاہیں.
تو درج ذیل باتوں کا خاص خیال رکھیں۔

copyright policy کاپی رائیٹ‌پالیسی

• لکھاری، پر شائع شدہ تمام مواد کے جملہ حقوق17-2016 بحق لکھاری ڈاٹ کام محفوظ ہیں.
بغیر اجازت ویب سائیٹ سے مواد کاپی کرنا اخلاقاََ اور قانوناََ جرم ہے.

• بغیر اطلاع کیے آپ کوئی بھی تحریر پوری کی پوری شائع نہیں کر سکتے۔ ل
یکن بغیر اطلاع کیے اپنے بلاگ، فورم یا ویب سائیٹ پر کسی تحریر کا تقریباً 25 فیصد حصہ شائع کر سکتے ہیں
اور ساتھ میں لکھاری ڈاٹ کام ویب سائیٹ پر موجود خاص اس تحریر کا حوالہ بمع لنک دینا ضروری ہے۔

• کوئی بھی تحریر پوری کی پوری یا اس کا تھوڑا بہت حصہ بغیر اجازت پرنٹ کر کے شائع نہیں کر سکتے۔

• لکھاری ٹیم کی تیار کردہ کسی بھی قسم کی فائل بغیر اجازت کسی دوسری جگہ اپلوڈ نہیں کر سکتے.
لیکن انتہائی مجبوری میں اپلوڈ کرنی پڑے تو ویب سائیٹ‌انتظامیہ کو اطلاع کرنا ضروری ہے.
اور مجبوری ختم ہونے کے ساتھ ہی وہ اپلوڈ کی ہوئی فائل بھی ختم کرنا ضروری ہے۔

• لکھاری ویب سائیٹ‌کی تیار کردہ کسی بھی قسم کی فائل کا لنک ہر جگہ ہر کسی سے شیئر کر سکتے ہیں .
لیکن صرف لکھاری ڈاٹ کام کا فراہم کردہ لنک اور وہ بھی جو لکھاری ویب سائیٹ کا ہو صرف وہی شیئر کر سکتے ہیں۔

• لکھاری ٹیم کی جانب سے تیار کردہ کسی بھی فائل یا دیگر کسی مواد میں لکھاری ویب سائیٹ‌انتظامیہ کی اجازت کے بغیر تبدیلی نہیں کر سکتے۔

تبصروں کی پالیسی

• مضامین پر ہونے والے تبصروں‌سے ویب سائٹ اور ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں‌ہے

• تہذیب اور اخلاقیات کے دائرے میں رہتے ہوئے ہر کسی کو ہر بات کہنے اور اختلاف کرنے کا مکمل حق حاصل ہے۔
بد تہذیبی اور اخلاقیات سے گرے ہوئے تبصرے فوراً تبصرہ نگار کو بغیر اطلاع کیے ختم کر دیے جائیں گے۔

• کسی تحریر پر تبصرہ یا کسی قسم کا سوال ہمیشہ موضوع کے مطابق ہی کریں۔

• اگر آپ کوئی سوال پوچھنا چاہتے ہیں اور آپ کو متعلقہ موضوع نہیں مل رہا تو ویب سائیٹ پر موجود تلاش والے خانے کے ذریعے اپنا متعلقہ موضوع تلاش کر لیں۔

مضامین کے حوالے سے پالیسی

• لکھاری ڈاٹ‌کام پر شائع شدہ مضامین میں‌مصنف کی رائے اس کی زاتی رائے ہے.
ویب سائیٹ کا مصنف کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں‌.

چیف ایڈیٹر

تنویراعوان