لکھاری لکھاری » لکھاری » پاک پھلی سے پاک ایم ایم اے

ad




ad




اشتہار




لکھاری میرے مطابق

پاک پھلی سے پاک ایم ایم اے


جب بھی بال کٹوانے جاؤں تو ہیئر سیلون کے بلکل سامنے واقع ریسٹورنٹ سے کچھ نہ کچھ کھانے چلا جاتا ہوں ، اکثر جب باہر لگی کرسیوں پر بیٹھنا ہو تو بلکل سامنے یہ رہڑھی کھڑی رہتی ہے ، گرمیوں میں شربت جب کہ سردیوں میں خشک میوہ جات اسی رہڑھی پر بیچے جاتے ہیں ، گرمیوں میں جب یہاں کھانا کھانے بیٹھا تھا تو سامنے ریڑھی پر ” شربت پاک ” لکھا ہوا تھا جب کہ نیچے ” تخ ملنگا پاک، ” والا اسپیشل شربت پاک، بھی لکھا ہوتا تھا جسے پڑھ کر ہمیشہ حیرت ہوتی کہ آخر یہ ” پاک،” کا کیا چکر ہے ؟

یہ بھی پڑھیں  ایم ایم اے تیسری بڑی قوت بن سکتی ہے

آج جب ٹھنڈ کے موسم میں بال کٹوانے کے بعد کھانا کھانے گیا تو ریڑھی پر شربت پاک کی جگہ ” پھلی پاک، ” لکھا ہوا تھا جبکہ نیچے ” کھوپرا پاک، ،چنا پاک، اور بادام پاک، وغیرہ لکھا ہوا تھا . آج رہا نہیں گیا تو موصوف رہڑھی بان سے پوچھ ہی لیا کہ بھئی آخر یہ پاک، کا چکر کیا ہے ؟ موصوف مسکراتے ہوئے فرمانے لگے

یہ بھی پڑھیں ایم ایم اے وقت کی ضرورت

” بھائی جہاں سے رزق ملے یا فائدہ ہو وہ سب چیزیں پاک، ہی ہیں ”
خیر یہ سن کر مجھے متحدہ مجلس عمل کی بحالی یاد آگئی کہ جہاں پاکستان ،کی تاریخ میں دوسری بار ” بریلوی پاک، ، دیوبندی پاک، ، وہابی پاک، اور شیعہ پاک ” کو ملا کر ایک “پاک” پلیٹ فارم ترتیب دیا گیا ہے جو غالباً الیکشن کے موسم تک ” پاک ” ہی رہیگا !!